47

مونگ پھلی کھانے کے فوائد اور کچھ نقصانات فوائد

مونگ پھلی کھانے کے فوائد اور کچھ نقصانات
فوائد:
مونگ پھلی میں پروٹین، کیلشیم، وٹامنB6 ،B1، وٹامن D، وٹامن E، فاسفورس، فیٹ تھایامائن، نیاسن، فولاد، آئرن،فولک ایسڈ، کاپر، فولیٹ، فاسفورس اور مفید ریشے، پائے جاتے ہیں۔
مدافعتی نظام، دل و خون کی شریانیں طاقتور، ہڈیاں، دانت، گرتے بال مضبوط، الزائمر، کینسر سے تحفظ، بڑھاپے کے اثرات میں کمی، کولسٹرول میں کمی، زہریلے مواد دور کرتی ہے۔

نقصانات:
1۔ مونگ پھلی کھانے سے معدے میں تیزبیت ہوجاتی ہے۔ اس کو محدود کھائیں زیادہ کھانے سے معدے میں گرمائش بڑھ جاتی ہے جس سے ہاضمے کا مسئلہ بھی ہوجاتا ہے۔ اور دل متلی کرتا ہے۔ یرقان کے مریض بالکل نہ کھائیں۔

2۔ یہ سانس کے مرض کی ایک اہم وجہ بنتی ہے کیونکہ اس میں آئل پایا جاتا ہے جس سے سانس اکھڑنے لگتا ہے۔ دمعہ کے مریض مونگ پھلی کھانے سے اجتناب کریں۔

3۔ زیادہ مونگ پھلی کھانے سے جسم میں خارش اور سر میں خشکی ہونے کا خدشہ ہے۔ روزانہ کھانے سے گریز کریں کیونکہ یہ جہاں آئلی ہے وہیں خشک بھی ہے اور اس میں aflatoxin contamination, phytic acid content پائے جاتے ہیں جو خشکی کا سبب ہیں۔
4۔ حاملہ خواتین مونگ پھلی کھانے سے گریز کریں کیونکہ یہ خشک ہوتی ہیں اور الرجی کا باعث بن سکتی ہیں، لہٰذا حمل کے دوران اجتناب کریں۔ اس میں فولیٹ کی بڑی مقدار پائی جاتے ہیں جو نقصان دہ ہوتے ہیں۔

5۔ روزانہ اور زیادہ کھانے سے وزن بھی بڑھتا ہے اور میٹابولزم سست روی سے کام کرتا ہے۔

6۔ اس سے جسم میں سوڈیم کی مقدار بڑھ جاتی ہے جس سے بلڈ پریشر اور دل کا عارضہ بھی لاحق ہوسکتا ہے.
سردیوں کے موسم میں خشک میوہ جات اعتدال کے ساتھ بدل بدل کر کھائیں جائیں تو مفید ثابت ہوتے ہیں..!

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں